ا

khwab nama khwab men insani badan dekhna

khwab nama khwab me n insani badan dekhna

khwab nama khwab men insani badan dekhna

khwab nama khwab men insani badan dekhna

khwab nama khwab men insani badan dekhna

1khawab me badan ka mota hona or qawwi  hona usk deen o emaan k mazbut hone ki alamat he11

2kisi ne dekha k uska jism sanp k jism ki tarha ban gya he to iski tabeer ye he k wo adawt ko zahir krega

3kisi ne dekha k uski sureen bakery ki sureen ki trha ban gai he to wald marzuk ki daleel he jo uski achhi zindagi ka sabab bane gi

4kisi ne khawab dekha k uska jism lohay ka he to uskmarne ki alamat he

5khawab me baddan k adar ghair mamuli tabdeli jo nuksan de na ho kasrate nemat ki nishani he

6kisi ne dekha k wo khawab me apne jism ko khujlata he to daleel he wo apne rishtedaon k ehwal ki nigehbani karega is me usko takleef hogi

7kisi ne dekha wo apa jism khujla raha he lekin usko sakoo nhe mil raha daleel he rishtedaron ki taraf se usko takleef milegi agar khujlane se rahat o sakoo mehsus kare to ye khairey azeem milne ki daleel he

8badan ka barhna mota hona  maal o izzat ki ziyadti he badan ka km ya kamzoor hona maali or ilmi nuksaan ki daleel he kabhi kabhi iski dalallat na pasandeda logon se muhabbat kam hone par hoti he

9kabhi badan ki dalallat un chizon par hoti he jo insan ko chhupate hen masln libaas bivi maskan mehboob aolad potay waghaira kisi tarha un logon par bhi dlallat karta he   jin k aeza se khud ko bachana hota he maslan badshah sardar waghaira

10badan ki quwwat uska husn un logon k husne haal par dalallat karta he jin par badan dalallat karta he is me kamzori or bad bu unk suey haal ki daleel he jin par badan ka itlaaq he

11khawab me jism ka achhi tarha mazbut hona buland qadri or dushmano par ghalba ki alamat he

اچھا خواب نعمتِ خدا وندی

حضورﷺ نے ارشاد فرمایا ” بشارتوں کے سوا کوئی چیز باقی نہیں رہی ۔ صحابہ نے عرض کیا ےیا رسولاللہ بشارتوں سے کیا مراد ہے آپ نے فرمایا سچا خواب ۔(صحیح بخاری عن ابی ھریرہ) بخاری ومسلم کی متفق علیہ حدیث ہے آنحضرت ﷺ نے ارشاد فرمایا کہ سچا خواب نبوت کا چھیاسواں حصہ ہے ۔

اس حدیث شریف معلوم ہوا کہ سچا خواب رویائے صالحہ علوم نبوت کا ایک جزو ہے اور علم نبوت باقی ہے گو انبیاءکرام کی آمد کا سلسلہ موقوف ہوچکا دوسرے لفظوں میں سچا خواب علوم نبوی کا عکس ہے۔

خواب کی اقسام

امام محمد بن سیرین ارشاد فرماتے ہیں کہ خواب تین قسم کے ہوتے ہیں ۔

1- مبشرات خداوندی –

2- تخویفِ شیطان) شیطان کے زیرِ اثر ) –

3- حدیثِ نفس یعنی ذہنی اور دماغی خیلات کا عکس –

اس تقسیم سے ظاہر ہوتا ہے کہ خواب کے تمام اقسام صحیح قابلِ تعبیر اوردر خوراعتناء نہیں ہوتے تعبیر اور اعتبار کے لائق وہی خواب ہوتے ہیں جو حق تعالیٰ کی طرف سے بشارت اور اعلام پر مبنی ہوں۔

علم تعبیر کے چھ مشہور امام
-علم تعبیر میں درج ذیل چھ آئمہ کرام کے اقوال کے بطور سند پیش کیا جاتا ہے
حضرت دانیال علیہ اسلام
حضرت امام جعفر صادق رضی اللہ تعالیٰ علیہ
حضرت امام محمد بن سرین رحمتہ اللہ علیہ
حضرت امام جابر مغربی رضی اللہ تعالیٰ علیہ
حضرت امام ابراہیم کرمانی علیہ رحمتہ اللہ علیہ
حضرت امام اسمعیل بن شوکت رحمتہ اللہ علیہ
تعبیر بیان کرنے کیلئے ضروری علوم
۔علم تفسیرعلم ضرب الامثالعلم حدیثاشعار عربعلم اشتقاق (صرف)نوادرعلم الغاتعلم الفاظ متد اَولہچنانچہ ایسے علماء ہے تعبیر بیان کرنے کے اہل ہیں جو ان علوم کے ماہر اور متقی پرہیزگار ہوں ۔
الوسوم

مقالات ذات صلة

اترك تعليقاً

لن يتم نشر عنوان بريدك الإلكتروني. الحقول الإلزامية مشار إليها بـ *

شاهد أيضاً
إغلاق
زر الذهاب إلى الأعلى
إغلاق
إغلاق